فیصل آباد میں آٹا، چینی مافیا کے بعد سیمنٹ مافیا بھی سرگرم!

فیصل آباد(مانیٹرنگ ڈیسک‘ویب ڈیسک‘صحافی ڈاٹ کام)فیصل آباد میں آٹا، چینی مافیا کے بعد سیمنٹ مافیا بھی سرگرم ہو گیا۔ سیمنٹ، اینٹوں، ریت، بجری کے ریٹ ڈبل کر دیئے گئے جس کے باعث تعمیراتی شعبہ بحران کا شکاراور سرکاری، غیر سرکاری تعمیراتی کام رک گئے۔صباح نیوز کے مطابق ڈپٹی کمشنر محمد علی نے تعمیراتی شعبہ میں ازخود مہنگائی کا نوٹس لیتے ہوئے اجلاس طلب کر لیا۔

ذرائع کے مطابق ایک ہفتہ کے دوران سیمنٹ کی بوری 500 روپے سے 650 تک پہنچ گئی جبکہ بھٹہ خشت مالکان بھی اینٹوں کے من مانے ریٹ وصول کر رہے ہیں۔ بلڈنگ میٹریل کے کاروبار سے وابستہ دکاندار بھی ریت، بجری کا مصنوعی بحران ظاہر کر کے منہ مانگے دام وصول کرنے لگے ہیں۔ شہری حلقوں نے ضلعی انتظامیہ سے مصنوعی مہنگائی پیدا کرنے والوں کے خلاف فوری ایکشن لینے کا مطالبہ کیا تھا کہ تعمیراتی میٹریل مہنگا اور تعمیراتی کام بند ہونے سے بیروزگاری میں بھی اضافہ ہو گا۔

تاہم تعمیراتی میٹریل کے بڑھتے ہوئے ریٹ پر ڈپٹی کمشنر فیصل آباد محمد علی نے فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے اس شعبہ سے وابستہ افراد کا اجلاس آج طلب کر لیا ہے اور مصنوعی بحران پیدا کرنے والوں کیخلاف سخت ایکشن اور مصنوعی مہنگائی کے مرتکب افراد کے خلاف سخت کارروائی کادعویٰ کیاہے

۔Sahafe.com.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں