مال خرچ کرنے کے فضائل میں

صحت کی حالت میں صدقہ (قسط۔3)
ایک اور حدیث میں حضور ؐ کا ارشاد نقل کیا گیا کہ جو شخص مر تے وقت صدقہ کر تا ہے اس کی مثال ایسی ہے جیسا کہ کوئی شخص جب خوب پیٹ پھرے تو بچے ہوئے کھانے کا ہدیہ تحفہ کسی کے پاس لے کر جائے (مشکوٰۃ)‘حضور اقدسﷺ نے مختلف مثالوں سے اس پر تنبیہ فرمائی کہ اصل صدقہ کا وقت تندرستی اور صحت کا ہے کہ اپنے نفس سے اصل مقابلہ اسی وقت ہے لیکن ان سب کا مطلب یہ نہیں کہ مر تے وقت کا صدقہ یا وصیت بیکار ہے‘بہرحال ثواب اس کا بھی ہے‘ ذخیرہ آخرت وہ بھی بنتا ہے البتہ اتنا ثواب نہیں ہو تا جتنا اپنی ضرورتوں اور راحتوں کے مقابلہ میں صدقہ کرنے کا ثواب ہے۔ (کتاب۔۔فضائل صدقات)

Sahafe.com

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں