تلاوت قرآن پاک دنیا میں نور‘آخرت میں ذخیرہ ہے

ابوذر ؓ کہتے ہیں کہ میں نے حضور ؐ سے درخواست کی کہ مجھے کچھ وصیت فرمائیں‘حضور ؐ نے فرمایا‘تقویٰ کا اہتمام کرو کہ تمام امور کی جڑ ہے‘میں نے عرض کیا کہ اس کے ساتھ کچھ اور بھی ارشاد فرما دیں تو حضور ؐ نے فرمایا کہ تلاوت قرآن کا اہتمام کرو کہ دنیا میں یہ نور ہے اور آخرت میں ذخیرہ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں