سیکولر بھارت کا چہرہ پھر بے نقاب،لیڈی ڈاکٹر نے خاتون کو بیٹے سمیت زندہ جلا ڈالا

بھرت پور(مانیٹرنگ نیوز‘ ویب ڈیسک‘ صحافی ڈاٹ کام)بھارتی ریاست راجستھان میں لیڈی ڈاکٹر نے خاتون اور اس کے بیٹے کو زندہ جلا کر مار ڈالا۔تفصیلات کے مطابق بین الاقوامی میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ یہ ہولناک واقعہ راجستھان کے شہربھرت پور میں پیش آیا جہاں لیڈی ڈاکٹر نے خاتون کو اس کے گھر میں ہی زندہ جلا دیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ مقتولہ کے لیڈی ڈاکٹر کے شوہر سے ناجائز تعلقات تھے جس پر لیڈی ڈاکٹر نے طیش میں آکراس کے گھر کو آگ لگا دی جس سے خاتون اور اس کا 6 سالہ بیٹا جھلس کر ہلاک ہوگئے۔پولیس نے متاثرہ فیملی کی درخواست پر واقعے کا مقدمہ درج کرتے ہوئے تین افراد کو گرفتار کیا جن میں لیڈی ڈاکٹرسیما، اس کا شوہر سدیپ جو کہ پیشہ کے اعتبار سے ڈاکٹر ہے اور اس کی والدہ شامل ہیں۔آئی این پی کے مطابق گرفتار ملزمان کو عدالت کے روبرو پیش کیا گیا جہاں عدالت نے خواتین کو جوڈیشل حراست میں دے دیا جب کہ مرد ڈاکٹر کو ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔پولیس نے تصدیق کی ہے کہ مقتولہ ڈاکٹر سدیپ کے اسپتال میں ملازمہ تھی اور اس دوران ان دونوں کے تعلقات پروان چڑھائے، سدیپ گپتا نے اپنی ملازمہ کو ایک اچھا گھر تحفے میں دیا تھا جہاں وہ اپنے بیٹے کے ساتھ رہائش پذیر تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں