ناقص کارکردگی‘کپتان کا 5کھلاڑیوں کے قلمدان تبدیل کرنے کا فیصلہ‘کھلاڑیوں میں کون کون شامل ہے ؟ جانیے

اسلا م آباد(مانیٹرنگ ڈیسک ‘ویب ڈیسک‘ صحافی ڈاٹ کام) وزیراعظم عمر ان خان نے نا قص کا رکر دگی پر 5وزرا کے قلمدان تبدیل کر نے کا حتمی فیصلہ کرلیا ہے جس میں وزیر خزانہ اسد عمر ، وزیر پٹرولیم غلا م سرور خان وزیر مملکت برائے داخلہ شہر یا ر آفریدی سمیت دیگر 2 وزرا شامل ہیں ۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے کابینہ میں ناقص کارکردگی دکھانے والے 5وزرا کے قلمدان کو تبدیل کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے میڈیا رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اسد عمر کو،وزیر خزانہ سے ہٹا کر وزیر پٹرولیم ، وزیر مملکت برائے داخلہ شہریا ر آفریدی کی جگہ اعجا ز شاہ کو ذمے داریا ں سونپنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ رپورٹ کے مطابق کابینہ میں وزراء کی تبدیلی گزشتہ ماہ کیا چکا تھا تاہم پلو اما واقعہ اور پا ک بھا رت کشیدگی کی وجہ سے اس فیصلے کو مو خر کر دیا گیا تھا ،یاد رہے کہ وزیر پٹرولیم غلا م سرور خان کی کا رکردگی پر خاصی تنقید کی وجہ سے ان کو مستقبل میں کو ئی وزارت نا دینے کا بھی امکان مو جو د ہے۔ رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم نے وزارت ریلو ے ، تو انائی ، مو اصلا ت کے وزیر وں کی کا رکر دگی کو سراہا ہے ۔ دوسری جانب وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے سوشل میڈیا پر ٹوئٹ کرتے ہوئے وزراء کے قلمبدان کے تبدیل کیئے جانے کی خبروں کی تردید کردی اور کہا کہ فی الحال کوئی وزیر نہیں ہٹا رہے میڈیا کو ذمہ داری کو مظاہرہ کرنا چاہیے ،اس وقت پاکستان بڑے اہم مرحلے سے گزر رہا ہے میڈیا کو اس ضمن میں ذمہ داری کا مظاہرہ کرنا چاہیے انہوں نے کہا کہ تبدیلی کی صوابدید صرف وزیر اعظم کے پاس ہے اور وزیر خزانہ اسد عمر کے آئی ایم ایف سے اچھے مذاکرات ہوئے ہیں وہ جلد اس حوالے سے قوم کو آگاہ کریں گے ۔ادھر وزیر اعظم کے ترجمان ندیم افضل چن نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ وفاقی کابینہ میں وزراء کے قلمدانوں میں تبدیلی کی خبروں کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت ایک یا دو وزراء کو بھی تبدیل نہیں کررہے ہیں ، وزراتوں میں تبدیلی سے متعلق چلنے والی خبروں میں کوئی صداقت نہیں ہے اور وزیر اعظم کے پاس استحقاق ہے کہ وہ کسی بھی وزارت کو کسی بھی وقت تبدیل کردے لیکن اس وقت کسی ایک یا دو وزراء کو بھی تبدیل کرنے کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں ندیم افضل چن نے کہا کہ عمران خان وفاقی کابینہ کے اجلاس میں وزارتوں کی کارکردگی کا جائزہ لیتے رہتے ہیں اور وہ ہر وزیر کی کارکردگی سے بخوبی آگاہ ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں