خورشید شاہ نے بچنے کیلئے کوششیں شروع کر دیں!

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک‘ویب ڈیسک‘ صحافی ڈاٹ کام) پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما خورشید شاہ نے کہا ہے کہ وفاقی وزرا کے خلاف انکوائریز چل رہی ہیں،خود وزیر اعظم پر انکوائری چل رہی ہے،مجھے 18 ستمبر کا پیش ہونے کا نیب کا نوٹس ملا اور گرفتار کر لیا گیا، مجھ پر لگنے والے الزامات جھوٹ کا پلندہ ہے۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ساری زندگی کرپشن کیخلاف عملی جدوجہد کی ہے، ظاہرشدہ جائیداد سے ایک انچ جائیداد زیادہ میری نہیں ہے،دوسروں کی جائیدادوں کو مجھ سے منسلک کیا گیا ھے۔ انہوں نے کہا میرا ان جائیداوں سے کوئی تعلق نہیں، ابھی اس کیس کی انکوائری چل رہی تھی، مجھے سیاست کرنی ہے اور سیاست میں رہنا ہے وقت ثابت کرئیگا کہ کوچ سچ بول رہا تھا 32سال پآرلیمنٹ میں گزار چکا ہوں صاف ستھری سیاست ملک اور پآرلیمنٹ کیلئے کی ہے۔ انہوں نے کہا جھوٹے الزامات اور حکومت کے دہرے معیار پر تکلیف ہوئی ہے چیف جسٹس آف پاکستان میرے کیس کانوٹس لیں۔ان گرفتاریوں پر چیف جسٹس کو نوٹس لینا چاہیے وزیر آعظم سمیت کئی وزرا کیخلاف نیب کی انکوائریوں چل رہی ہے۔ انہوں نے کہا حکومتی وزرا کو چھوٹ دی جا رہی ہے، اپوزیشن کی گرفتاریاں کی جار ہی ہیسب الزام جھوٹ پر مبنی ہے۔ اگر کرپٹ ہوتا اور میرا ضمیئر مطمئن نہ ہوتا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں